Wednesday, January 19, 2022
spot_imgspot_imgspot_imgspot_img
Homeکالمپنجاب میں پیپلز پارٹی کی واپسی

پنجاب میں پیپلز پارٹی کی واپسی

لاہور کے حلقہ این اے 133کے ضمنی الیکشن میں پیپلز پارٹی کے امیدواراسلم گل کو شکست کا سامنا کرناپڑا مگر حاصل کئے گئے ووٹوں کو اگر 2018ء میں اسی حلقہ سے پیپلزپارٹی کو ملنے والے ووٹوں کے تناظر میں دیکھاجائے تو یہ پیپلز پارٹی کی بھی جیت اور آئندہ الیکشن کے حوالے سے خوش آئند ہے، سابق صدر آصف علی زرداری اور پیپلز پارٹی کی دوسری قیادت اس کارکردگی پر نازاں ہے اور کارکنوں کو مبارکباد دے رہی ہے، اسے پنجاب میں پیپلز پارٹی کا ”کم بیک“ بھی قرار دیاجا رہا ہے۔کیاواقعی اسلم گل کو ملنے والے 32ہزار133وو ٹ پیپلزپارٹی کی پنجاب میں مقبولیت بڑھنے کا ثبوت ہے؟اسلم گل ایک جمہوریت پسند سیاسی کارکن ہیں اورانہوں نے ماضی میں پیپلز پارٹی سے وابستگی کی بھاری قیمت بھی اداکی،وہ حلقہ میں اہم سیاسی مقام رکھتے ہیں،مگر 2008ء کے الیکشن کے بعد پنجاب میں پارٹی کی مقبولیت کم ہوتی گئی،جبکہ ماضی میں یہ جماعت غریب اورمتوسط طبقہ کے لئے امید کی کرن تھی،مگر عوام کے اعتمادپر پورا نہ اترنے پر پہلے مسلم لیگ (ن) اور پھر تحریک انصاف پیپلز پارٹی کی را ہ میں رکاوٹ بنی،ضمنی الیکشن سے پہلے ہونے والے ہر الیکشن میں لاہور کے حلقوں سے اس نے سینکڑوں یا ہزاروں میں ووٹ لئے،این اے 133میں 2018ء کے الیکشن میں مسلم لیگ(ن) کے پرویز ملک نے 93ہزار کے قریب ووٹ لئے، جبکہ اسلم گل کے حصے میں محض پانچ ہزارووٹ آئے، جبکہ تحریک انصاف کے اعجاز چودھری نے 87ہزارووٹ حاصل کئے تاہم ضمنی الیکشن میں پی ٹی آئی کے امیدوار کے کاغذات نامزدگی مسترد ہو گئے تھے۔ یوں میدان میں دوپارٹیاں تھیں مسلم لیگ(ن) کے ووٹ نصف سے زائد کم ہوئے،حالانکہ امیدوار شائستہ پرویز مرحوم پرویز ملک کی بیوہ ہیں، جنہوں نے93ہزار ووٹ لئے تھے،ہمدردی کے ووٹ کے باوجود بھی شائستہ پرویز آدھے ووٹ بھی نہ لے سکیں، مقابلے میں 2018ء میں پانچ ہزارووٹ لینے والے اسلم گل کو32 ہزار133ووٹ حاصل ہوئے۔

کیا جنرل بپن راوت کے ہیلی کاپٹر کو ماؤ باغیوں نے نشانہ بنایا؟ انڈیا میں بحث چھڑ گئی
ایسا لگتا ہے جیسے ووٹر مسلم لیگ(ن) اورتحریک انصاف کی سیاست اور کار کردگی کے مقابلے میں اب پیپلز پارٹی کو بھی آزمانا چاہتے ہیں، مگراس کافیصلہ تب ہو گا جب یہ معلو م ہو سکے کہ اسلم گل کو ملنے والے ووٹ وہ تھے جو گزشتہ الیکشن میں مسلم لیگ(ن) کو ڈالے گئے تھے یا یہ ووٹ تحریک انصاف کے ہیں، جس کا کوئی امیدوار میدان میں نہ تھا، موخرالذکر بات سے اتفاق یوں بھی کیا جا سکتا ہے کہ تحریک انصاف (ن) لیگی امیدوارکی ہر حال میں شکست چاہتی تھی اسلئے ممکن ہے اس کے کارکنوں نے اسلم گل کو ووٹ ڈالے ہوں،یہ بھی ممکن ہے کہ آصف زرداری کی جادو کی پڑیا اور مفاہمت کی سیاست کام دکھا گئی ہو جنہوں نے الیکشن کے دِنوں میں لاہور میں پیپلز پارٹی کی قیادت کو متحرک رکھا اور پیپلز پارٹی کے رہنما یوسف رضا گیلانی،راجہ پرویز اشرف،قمر زماں کائرہ،چودھری منظور انتخابی مہم میں دن رات مصروف رہے،کارکنوں کو منظم اور متحرک کرنے اور دیگرجماعتوں کے سیاسی کارکنوں کو متوجہ کرنے میں کامیاب رہے ہوں،مسلم لیگ(ن) کا ووٹ خریدنے کا الزام محض سیاسی پراپیگنڈہ ہے کہ اسلم گل جاگیردار ہیں نہ سرمایہ دار،صنعت کے مالک ہیں نہ بڑے تاجر ہیں،اتنی بڑی تعدادمیں ان کے لئے ووٹوں کی خریداری ممکن ہی نہیں اور یہ بات ن لیگی قیادت بھی جانتی ہے کہ اسلم گل کوئی مالدار شخصیت نہیں، مگر ایک جیالے اور سیاسی کارکن ہیں۔
آصف زرداری اور بلاول بھٹو نے ضمنی الیکشن کو حوصلہ افزا قراردیا ہے، اور کہا ہے کہ پیپلز پارٹی پنجاب کی حقیقی نمائندہ جماعت ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ تحریک انصاف کے امیدوار کے میدان میں نہ ہونیکا پیپلز پارٹی نے فائدہ اٹھایا اورحلقے میں بھر پور محنت کر کے بہترین نتائج حاصل کئے،مگراس بنیاد پر یہ نہیں کہا جاسکتا کہ پیپلز پارٹی پنجاب میں دوبارہ مضبوط ہو رہی ہے،تحریک انصاف کے امیدوارکے کاغذات مسترد ہونے سے جو خلاء پیدا ہواء تھا اسے پیپلز پارٹی نے محنت اور ذہانت سے پرکیا،لیکن یہ کہنا بھی مشکل ہے کہ پیپلز پارٹی نے پنجاب میں تحریک انصاف کی جگہ لے لی ہے،یہ بات بھی اپنی جگہ ایک حقیقت ہے کہ پیپلز پارٹی کو (ن) لیگ مخالف جماعتوں عوامی تحریک،تحریک لبیک، اور دیگر کاووٹ بھی ملا ہے،تمام تر تبصروں تجزیوں کے باوجودپیپلز پارٹی ایک نظریاتی جماعت ہے، جمہوریت کی قربانیاں کسی بھی سیاسی جماعت سے زیادہ ہیں۔
بھٹو کی پھانسی کے بعدبینظیر اور پارٹی پر ابتلاء اور آزمائش کاایک لمبا اور کڑا دور آیا، بے نظیر بھٹو کو حکومت ملی تو پنجاب میں نواز شریف کو ان کے مقابل لاکھڑا کیا گیا،جنہوں نے وزیراعظم ہونے کے باوجود بینظیر کو پنجاب میں داخل نہ ہونے دیا،نواز شریف کو پورے ملک پر حکمرانی ملی سندھ بھی ان کی جھولی ڈال دیا گیا، مسلم لیگ(ن) نے سیاسی مقدمات کے ذریعے بینظیر کے لئے سیاست تو دور کی بات ان کا ملک میں رہنا بھی دشوار کر دیا،آصف علی زرداری نے طویل جیل کاٹی جو ریکارڈ ہے،

یہ وہ حالات تھے جن میں پیپلز پارٹی کے لئے پنجاب میں سیاست کرناممکن نہ رہا اوروہ پنجاب میں سکڑتی چلی گئی،مسلسل پنجاب پر حکومت کے بعد پنجاب میں مسلم لیگ (ن) کااثر ورسوخ بڑھتا چلا گیابعض لوگوں کے خیال میں ن لیگ اور پنجاب لازم و ملزوم ہو چکے ہیں،مگر میاں منظوروٹو نے صرف 18 ارکان کی مددسے یہ زعم توڑ دیا، چودھری پرویزالٰہی نے مشرف دور میں ثابت کیا کہ پنجاب پر کسی کااجارہ نہیں،بلکہ جوکارکردگی دکھائے گا وہ پنجاب میں حق حکمرانی حاصل کر پائے گا،اس وقت بھی عثمان بزدار جیسا نوآموز سیاست دان معمولی اکثریت سے کامیابی کے ساتھ ساڑھے تین سال سے حکومت کر رہا ہے، جو اس بات کا ثبوت ہے کہ سیاست میں کار کردگی کی بہت اہمیت ہے،اب جبکہ اپوزیشن اتحاد پی ڈی ایم میں ایک بار پھر اختلافات پھوٹ پڑے ہیں اور (ن) لیگ نے بھی فضل الرحمٰن کی اسمبلیوں سے استعفوں اور دھرنے کے معاملہ پر پیپلز پارٹی والا موقف اپنایا ہے تو یہ بات واضح ہو کر سامنے آ گئی ہے کہ آصف زرداری ہوشمند سیاست دان ہیں، صرف سیاست کے جادوگر ہی نہیں،بلکہ مفاہمت اور مصالحت کے بھی بادشاہ ہیں وہ اتحادیوں ساتھیوں دوستوں ہی نہیں دشمنوں کو بھی ساتھ لے کر چلنے کا ہنر جانتے ہیں۔پی ڈی ایم کی تحریک کے عروج کے دور میں جب پارلیمینٹ سے استعفوں اور دھرنے کی بات ہوئی تو زرداری کا موقف اس کے خلاف تھا انہوں نے پہلے پنجاب میں عدم اعتماد لانے کی تجویزدی اور موقف اختیار کیا کہ استعفے حکومت کو ریلیف دینے کے مترادف ہو گا،حکومت خالی حلقوں میں الیکشن کرا کے مطلوبہ اکثریت حاصل کر کے مضبوط ہو جائے گی،حکومت کی اصل طاقت پنجاب ہے اورپنجاب اس سے چھین کر اسے کمزور کیا جا سکتاہے،مگر تب نوازشریف فضل الرحمٰن کی زبان بولتے تھے، مگر اب فضل الرحمٰن کے مطالبہ پرانہوں نے یہ کہہ کر لالی پاپ دیدیا کہ استعفے تو جیب میں پڑے ہیں جب مرضی دے دیں،ابھی لانگ مارچ تک محدودرہیں دھرنے کا بھی بعد میں سوچیں گے،جو اس بات کا ثبوت ہے کہ مسلم لیگ(ن) شہباز شریف کامفاہمت اور مصالحت کا بیانیہ اپنا چکی ہے اور نوازشریف کا بیانیہ دفن ہو چکا،یہ بھی دراصل آصف زرداری کی جیت ہے،اس تناظر میں پیپلز پارٹی کی حالیہ کار کردگی کواتفاقی سمجھنا شائد درست نہ ہو۔

RELATED ARTICLES

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

- Advertisment -spot_img

Most Popular

Recent Comments