0

“انیمل” دیکھنے میں 3 گھنٹے ضائع کر دیے؛ بھارتی کرکٹر کی فلم پر تنقید

ممبئی: بھارتی کرکٹ ٹیم کے فاسٹ بولر جے دیو اندکٹ نے بالی ووڈ اسٹار رنبیر کپور کی ایکشن تھرلر ہٹ فلم “انیمل” پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ اُنہوں نے فلم دیکھ کر اپنے 3 گھنٹے ضائع کردیے۔سندیپ ریڈی وانگا کی ہدایت کاری میں بننے والی فلم “انیمل” کی مقبولیت میں جہاں ہر گزرتے دن کے ساتھ اضافہ ہورہا ہے تو وہیں فلم کو شدید تنقید کا بھی سامنا ہے کیونکہ فلم میں رنبیر کپور کو ایک انتقامی بیٹے کے طور پر دِکھایا ہے جو اپنے والد کا بدلہ لینے کے لیے ایک خونخوار گینگسٹر بن جاتا ہے اور بےرحمی سے قتل کرتا ہے جبکہ فلم میں جنگ، انتقام اور تشدد سے بھرپور مناظر بھی دِکھائے گئے ہیں۔ایسے میں بھارتی فاسٹ بولر جے دیو اندکٹ نے “انیمل” دیکھنے کے بعد، فلم کے حوالے سے اپنی رائے کا اظہار کرنے کے لیے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ایکس (سابق ٹوئٹر) کا رُخ کیا۔بھارتی فاسٹ بولر نے اپنے ٹوئٹ میں کہا کہ “فلم انیمل ایک آفت ہے، آج کے دور میں بدگمانی کی تعریف کرنا اور پھر اسے محض ‘روایتی مردانگی’ کا نام دینا ایک رسوائی ہے کیونکہ ہم جنگل یا محلوں میں نہیں رہ رہے اور نہ ہی ہم جنگیں لڑ رہے ہیں”۔جے دیو اندکٹ نے کہا کہ “اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ اداکاری کتنی اچھی تھی، ہمیں انتقام اور تشدد وغیرہ کو لاکھوں لوگوں کے سامنے اپنی فلموں میں نہیں دکھانا چاہیے”۔اُنہوں نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ “مجھے بُرا لگ رہا ہے کہ میں نے اپنے 3 گھنٹے ایک ایسی فلم دیکھنے میں ضائع کر دیے”۔بھارتی فاسٹ بولر نے فلم ‘انیمل’ کے بارے میں اپنے خیالات کا اظہار کرنے کے بعد اپنے ایکس اکاوْنٹ سے پوسٹ ڈیلیٹ کردی، تاہم اُن کی پوسٹ مختلف سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر وائرل ہورہی ہے۔واضح رہے کہ رنبیر کپور کی ’انیمل‘ نے انڈین باکس آفس پر تہلکہ مچایا ہوا ہے، یکم دسمبر کو ریلیز ہونے والی فلم اب تک پوری دنیا سے 500 کروڑ سے زائد کا بزنس سمیٹ چکی ہے۔’انیمل‘ میں رنبیر کپور کے مقابلے میں بوبی دیول نے ولن کا کردار ادا کیا ہے جبکہ رشمیکا مندانا نے فلم میں خاتون اداکارہ کا مرکزی کردار نبھایا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں