0

لندن میں چار سال تک مظاہرہ کرنے والے پاکستانیوں کو کیا ملا، نواز شریف

مسلم لیگ ن کے قائد اور سابق وزیراعظم نواز شریف نے کہا ہے کہ اپنے گھر اور دفتر کے باہر مظاہرے کرنے والے پاکستانیوں سے سوال کیا ہے کہ انہیں چار سال میں یہ سب کر کے کیا ملا اگر مظاہرہ کرنا ہی ہے تو پاکستان جاکر کریں۔پاکستان روانگی سے قبل لندن میں صحافیوں سے غیر رسمی ملاقات میں نواز شریف نے برطانیہ میں قیام کے دوران کوریج کرنے والے تمام صحافیوں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ میرے حق میں اور میرے خلاف لکھنے والے تمام صحافیوں کا شکر گزار ہوں۔انہوں نے کہا کہ ’آج دفتر میں آخری دن ہے پھر میں روانہ ہو جاؤں گا۔نواز شریف کا کہنا تھا کہ معاشرے میں صحافت کا اہم کردار ہے، عوام صحافیوں کی رائے کو اہمیت دیتے ہیں، غیبت، چغلی اور بہتان بازی سے صحافیوں کو پرہیز کرنا چاہیے۔ تنقید برائے تنقید کے بجائے تنقید برائے اصلاح ہونی چاہیے۔مسلم لیگ ن کے قائد کا کہنا تھا کہ ’مریم اورنگزیب سمیت دیگر خواتین کا لندن میں گھیراؤ کیا گیا جو ایک نامناسب عمل ہے، پاکستانیوں کو چار سال کے دوران لندن میں مظاہروں کا کیا فائدہ ہوا، مظاہرے پاکستان جا کر کریں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں